اب کے ہم بحچھڑے تو شاید کبھی خوابوں میں ملیں

اب کے ہم بحچھڑے تو شاید کبھی خوابوں میں ملیں
جس طرح سوکھے ہوئے پھول کتابوں میں ملیں۔


ab k bichrey toh sayad kabhi khawabo mein milein
jis tarha sookhein hue phool kitabao mein milein

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے

Featured Post

Yaro k Humra Chaley By Jaun Elia