Tuesday, December 24, 2019

کردیا پریشان مجھے نجومی نے ہاتھ دیکھ کر

کردیا پریشان مجھے نجومی نے ہاتھ دیکھ کر
کہتا ہے تجھے موت نہیں کسی کی یاد مارے گی۔

کردیا پریشان مجھے نجومی نے ہاتھ دیکھ کر


kardiya pershan majhey najoomi ney hath dhek kar
kehta hai tujhey mout nehi kisi ki yaad marey gi



No comments:

Post a Comment

Share your thoughts with me