رمز - Ramz by John Elia


رمز 
رمز - Ramz by John Elia


تم جب آؤ گی ، تو کھویا ہوا پاؤ گی مجھے 
tum jab ao gi toh khoya hua paoo gi majhey

میری تنہائی میں خوابوں کے سوا کچھ بھی نہیں 
meri tanhai mein khwabo k siwa kuch bhi nehi

میرے کمرے کو سجانے کی تمنا ہے تمہیں 
mere kamrey ko sajaney ki tamana hai tumhey

میرے کمرے میں کتابوں کے سوا کچھ بھی نہیں 
mere kamrey mein kitabo k siwa kuch bhi nehi

ان کتابوں نے بڑا ظلم کیا ھے مجھ پر 
in kitabo ney bara  zulm kiya hai majh per

ان میں اک رمز ھے جس رمز کا مارا ہوا ذہن 
in mein aik ramz hai jis ramz ka mara hua zehan

مژدہ عشرتِ انجام نہیں پا سکتا 
mazda ashrat e anjaam nehi paa sakta


زندگی میں کبھی آرام نہیں پا سکتا
zindagi mein kabhi aram nehi paa sakta
Check this out


ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے

Featured Post

Mirza ghalib fikar insaa par tri hasti se