تعاقُب - Taqub By John Elia


تعاقُب  
تعاقُب - Taqub By John Elia



مجھ سے پہلے کے دن 
majh sey pehle k din

اب بہت یاد آنے لگے ہیں تمہیں 
ab bohat yaad aney lage hai tumhey

خواب و تعمیر کے گم شدہ سلسلے 
khwab wa tameer k ghumshuda silsiley

بار بار اب ستانے لگے ہیں تمہیں 
bar bar ab sataney lage hai tumhey

دکھ جو پہنچے تھے تم سے کسی کو کبھی 
dhukh jo pohanchy they tum sey kisi ko kabhi

دیر تک اب جگانے لگے ہیں تمہیں 
der tak ab jaganey lage hai tumhey

اب بہت یاد آنے لگے ہیں تمہیں 
ab bohat yaad aney lage hai tumhey

اپنے وہ عہد و پیماں جو مجھ سے نہ تھے 
apney woh ahad e pama jo majh sey na they

کیا تمہیں مجھ سے اب بھی کچھ کہنا ہے؟
kiya tumhey majh se ab bhi kuch kahna hai

Jaun Elia

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے

Featured Post

Mirza ghalib fikar insaa par tri hasti se