Haar Ayi Hai By Jaun Elia - ہار آئی ہے کوئی آس مشین


ہار آئی ہے کوئی آس مشین 
Haar Ayi Hai By Jaun Elia - ہار آئی ہے کوئی آس مشین

شام سے ہے بہت اداس مشین 

دل دہی کس مشین سے چاہے 

ہے مشینوں سے بدحواس مشین 

یہی رشتوں کا کار خانہ ہے 

اک مشین اور اس کے پاس مشین 

کام سے تجھ کو مس نہیں شاید 

چاہتی ہے ذرا مساس مشین 

یہ سمجھ لو کہ جو بھی جنگلی ہے 

نہیں آئے گی اس کو راس مشین 

شہر اپنے، بسائیں گے جنگل 

تجھ میں اگنے کو اب ہے گھاس مشین 

ہے خفا سارے کارخانے سے 

ایک اسباب ناشناس مشین 

ایک پرزا تھا وہ بھی ٹوٹ گیا 

اب رکھا کیا ہے تیرے پاس مشین


Check this out


roman urdu 


haar aayi hai koi aas machine


shaam se hai bohat udaas machine



dil dahi kis machine se chahay



hai machinon se bad hawas machine



yahi rishton ka car khanah hai



ik machine aur is ke paas machine



kaam se tujh ko miss nahi shayad



chahti hai zara مساس machine



yeh samajh lau ke jo bhi jungli hai



nahi aeye gi is ko raas machine



shehar –apne, basayen ge jungle



tujh mein ugnay ko ab hai ghaas machine



hai khafa saaray karkhanay se



aik asbaab na shanas machine



aik purza tha woh bhi toot gaya




ab rakha kya hai tairay paas machine

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے

Featured Post

Mirza ghalib fikar insaa par tri hasti se