Meri Aqal Wa Hosh By Jaun Elia

 Meri Aqal Wa Hosh By Jaun Elia



میری عقل و ہوش کی سب حالتیں

تم نے سانچے میں جنوں کے ڈھال دیں

کر لیا تھا میں نے عہد ترک عشق

تم نے پھر بانہیں گلے میں ڈال دیں 

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے

Featured Post

Hai Tamana Naye Shaam By Jaun Elia