Type Here to Get Search Results !

Search This Blog

Karta Hai haa Hoo Majh Mein By Jaun Elia

 Karta Hai haa Hoo Majh Mein By Jaun Elia 



کرتا ہے ہا ہُو مجھ میں

کون ہے بے قابو مجھ میں 

یادیں ہیں یا بلوا ہے

چلتے ہیں چاقو مجھ میں 

لے ڈوبی جو ناؤ مجھے

تھا اس کا چپو مجھ میں 

جانے کن کے چہرے ہیں

بے چشم و ابرو مجھ میں 

ہیں یہ کس کے تیغ و علم

بے دست و بازو مجھ میں 

جانے کس کی آنکھوں سے

بہتے ہیں آنسو مجھ میں 

ڈھونڈتی ہے اک آہو کو

اک مادہ آہو مجھ میں 

آدم ، ابلیس اور خدا

کوئی نہیں یکسو مجھ میں 

میں تو ایک جہنم ہوں

کیوں رہتا ہے تو مجھ میں 

جون کہیں موجود نہیں

میرا ہم پہلو مجھ میں 

اب بھی بہاراں مژدہ ہے

ایک خزاں خوشبو مجھ میں 

Tags

Post a Comment

0 Comments
* Please Don't Spam Here. All the Comments are Reviewed by Admin.

Featured Post

 Aaab O Hawa Nehi Kia By Jaun Elia

Top Post Ad