Monday, August 9, 2021

Kisi k Bas Mein Hai By Jaun Elia

 Kisi k Bas Mein Hai By Jaun Elia

Jaun Elia

 

اب جنوں کب کسی کے بس میں ہے

اُس کی خوشبو، نفس نفس میں ہے 

حال اس صید کا سنایئے کیا ؟

جس کا صیاد خود قفس میں ہے

کیا ہے گر زندگی کا بس نہیں چلا 

زندگی کب کسی کے بس میں ہے

غیر سے رہیو تُو ذرا ہشیار

وہ ترے جسم کی ہوس میں ہے 

پاشکستہ پڑا ہوں مگر

دل کسی نغمہِ جرس میں ہے 

جون ہم سب کی دسترس میں ہیں

وہ بھلا کس کی دسترس میں ہے 

No comments:

Post a Comment

Share your thoughts with me