Saturday, October 9, 2021

Saza Do Toh Maza A Jaye By Jaun Elia

 Saza Do Toh Maza A Jaye By Jaun Elia

Jaun Elia

 

تشنہ کامی کی سزا دو تو مزا آ جائے

تم ہمیں زہر پلا دو تو مزہ آجائے 

میر محفل بنے بیٹھے ہیں بڑے ناز سے ہم

ہمیں محفل سے اٹھا دو تو مزہ آجائے 

تم نے احسان کیا تھا جو ہمیں چاہا تھا 

اب وہ احسان جتا دو تو مزہ آجائے 

اپنے یوسف کو زلیخا کی طرح تم بھی کبھی

کچھ حسینوں سے ملا دو تو مزہ آجائے 

چین پڑتا ہی نہیں ہے تمہیں اب میرے بغیر

اب جو تم مجھ کو گنوا دو تو مزہ آجائے 

No comments:

Post a Comment

Share your thoughts with me